لکھیں اور 40404 پر سینڈ کریں۔ پھر اپنا نام لکھ کر 40404 پر سینڈ کریںFollow         Pak488 میں جا کر Write         Message     اردو ادب کے تمام شعرائے کرام کی شاعری کے ایس ایم ایس اپنے موبائل پر مفت حاصل کرنے کے لئے






Jo Qurbaton Ke Nashay Thay Wo Ab Utarne Lagay..





جو قربتوں کے نشے تھے وہ اب اترنے لگے
ہوا چلی ہے تو جھونکے اداس کرنے لگے

گئی رتوں کا تعلق بھی جان لیوا تھا
بہت سے پھول نئے موسموں میں مرنے لگے

وہ مدتوں کی جدائی کے بعد ہم سے ملا
تو اس طرح سے کہ اب ہم گریز کرنے لگے

غزل میں جیسے ترے خد و خال بول اٹھیں
کہ جس طرح تری تصویر بات کرنے لگے

بہت دنوں سے وہ گمبھیر خامشی ہے فرازؔ
کہ لوگ اپنے خیالوں سے آپ ڈرنے لگے

احمد فراز
Relevent Best Poetry
Yad Rakhna Hamari Turbat ko

Khamosh Lub Hain Jhuki Hain ...

Aaj Dareechay Mein Woh Aana ...

Patti Patti Sey Na Khoon Ubl...

Khabar Nahin Muhabbat Hai Ke...

Zameen e Zard Ki Matti Mehkt...



Powered By: eVision Development Solutions Visit: www.evdsp.com