لکھیں اور 40404 پر سینڈ کریں۔ پھر اپنا نام لکھ کر 40404 پر سینڈ کریںFollow         Pak488 میں جا کر Write         Message     اردو ادب کے تمام شعرائے کرام کی شاعری کے ایس ایم ایس اپنے موبائل پر مفت حاصل کرنے کے لئے






Sayaad to Imkaan e Safar Kaat Raha Hai....





صیّاد تو امکان سفر کاٹ رہا ہے
اندر سے بھی کوئی مرے پر کاٹ رہا ہے

اے چادر منصب، ترا شوقِ گلِ تازہ
شاعر کا ترے دستِ ہُنر کاٹ رہا ہے

جس دن سے شمار اپنا پناہگیروں میں ٹہرا
اُس دن سے تو لگتا ہے کہ گھر کاٹ رہا ہے

کس شخص کا دل میں نے دُکھایا تھا، کہ اب تک
وہ میری دعاؤں کا اثر کاٹ رہا ہے

قاتل کو کوئی قتل کے آداب سکھائے
دستار کے ہوتے ہوۓ سر کاٹ رہا ہے

پروین شاکر
Relevent Best Poetry
HUM Sey Khul Jao Bawaqt Maye...

Gharoob E Sham Hi Se Khud Ko...

Khayal o Harf Ki Duniya Nikh...

Kaise Unhain Bhulaon Jinhon ...

Hamgama Hai Kiyon Barpa Thor...

Tumhare Shehr Ka Mosam Bara ...



Powered By: eVision Development Solutions Visit: www.evdsp.com