لکھیں اور 40404 پر سینڈ کریں۔ پھر اپنا نام لکھ کر 40404 پر سینڈ کریںFollow         Pak488 میں جا کر Write         Message     اردو ادب کے تمام شعرائے کرام کی شاعری کے ایس ایم ایس اپنے موبائل پر مفت حاصل کرنے کے لئے
جب بھی آتا ہے مرا نام ترے نام کے ساتھ جانے کیوں لوگ مرے نام سے جل جاتے ہیں قتیل شفائی






Wo Jo Hum Mein Tum Mein Qaraar Tha, Tumhain Yaad Ho K Na Yaad Ho





وہ جو ہم میں تُم میں قرار تھا، تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 
وہی یعنی وعدہ نِباہ کا تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

وہ جو لُطف مجھ پہ تھے پیشتر، وہ کرم کہ تھا مِرے حال پر 
مجھے سب ہے یاد ذرا ذرا، تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

وہ نئے گِلے، شکائتیں، وہ مزے مزے کی حکائتیں 
وہ ہر ایک بات پہ رُوٹھنا، تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

کبھی بیٹھے سب میں جو رُوبرو، تو اشارتوں ہی سے گفتگو 
وہ بیان شوق کا بَرملا، تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

کوئی بات ایسی اگر ہوئی کہ تمہارے جی کو بُری لگی 
تو بیاں سے پہلے ہی بھولنا، تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

کبھی ہم میں تم میں بھی چاہ تھی، کبھی ہم کو تُم سے بھی راہ تھی 
کبھی ہم بھی تم تھے آشنا تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

سُنو ذکر ہے کئی سال کا، کہ کیا اِک آپ نے وعدہ تھا 
سو نباہنے کا تو ذِکر کیا تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

وہ بگڑنا وصل کی رات کا، وہ نہ ماننا کسی بات کا 
وہ نہیں نہیں کہ ہر آن ادا، تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو 

جسے آپ گِنتے تھے آشنا، جسے آپ کہتے تھے با وفا 
میں وہی ہوں مومن مُبتلا، تمہیں یاد ہو کہ نہ یاد ہو

مومن خان مومن
Relevent Best Poetry
Koi Mujh Ko Mera Bahr Poor S...

Ye Hikamat Malkooti, Yeh Ila...

Titliyaan Jugnoo Sabhi Hon G...

Wo Mujh Ko Sonp Gaya Furqata...

Khwahishain Jhuriyan ban Ke ...

Meri jaan Uth Ke Na Ja Abhi ...



جب بھی آتا ہے مرا نام ترے نام کے ساتھ جانے کیوں لوگ مرے نام سے جل جاتے ہیں قتیل شفائی

Powered By: eVision Development Solutions Visit: www.evdsp.com