لکھیں اور 40404 پر سینڈ کریں۔ پھر اپنا نام لکھ کر 40404 پر سینڈ کریںFollow         Pak488 میں جا کر Write         Message     اردو ادب کے تمام شعرائے کرام کی شاعری کے ایس ایم ایس اپنے موبائل پر مفت حاصل کرنے کے لئے






Wo Kon Log Thay Un Ka Pata to Karna Tha..





وہ کون لوگ تھے ، ان کا پتہ تو کرنا تھا 
مرے لہو میں نہا کر جنہیں نکھرنا تھا

یہ کیا کہ لوٹ بھی آئے سراب دیکھ کے لوگ 
وہ تشنگی تھی کہ پاتال تک اترنا تھا

گلی کا شور ڈرائے گا دیر تک مجھ کو 
میں سوچتا ہوں دریچوں کو وا نہ کرنا تھا

یہ تم نے انگلیاں کیسے فگار کر لی ہیں ؟
مجھے تو خیر لکیروں میں رنگ بھرنا تھا

وہ ہونٹ تھے کہ شفق میں نہائی کرنیں تھیں ؟
وہ آنکھ تھی کہ خنک پانیوں کا جھرنا تھا ؟

گلوں کی بات کبھی راز رہ نہ سکتی تھی 
کہ نکہتوں کو تو ہر راہ سے گزرنا تھا

خزاں کی دھوپ سے شکوہ فضول ہے محسن 
میں یوں بھی پھول تھا آخر مجھے بکھرنا تھا

محسن نقوی
Relevent Best Poetry
kuch Khabar Laai to Bad e Ba...

Naye Kapray Badal Kar Jaaon ...

Zeest Ka Bhi Adab Nahin Hota...

Samandar Mein Utarta Hon to ...

Wo Shakhs K Main Jis Se Muha...

Wada e Wasal Aur Wo Kuck Baa...



Powered By: eVision Development Solutions Visit: www.evdsp.com