لکھیں اور 40404 پر سینڈ کریں۔ پھر اپنا نام لکھ کر 40404 پر سینڈ کریںFollow         Pak488 میں جا کر Write         Message     اردو ادب کے تمام شعرائے کرام کی شاعری کے ایس ایم ایس اپنے موبائل پر مفت حاصل کرنے کے لئے






Youn hi To Shakh Se Pattay Gira Nahin Karte...





یوں ہی تو شاخ سے پتے گرا نہیں کرتے
بچھڑ کے لوگ زیادہ جیا نہیں کرتے

جو آنے والے ہیں موسم انہیں شمار میں رکھ
جو دن گزر گئے ان کو گنا نہیں کرتے

نہ دیکھا جان کے اس نے کوئی سبب ہوگا
اسی خیال سے ہم دل برا نہیں کرتے

وہ مل گیا ہے تو کیا قصۂ فراق کہیں
خوشی کے لمحوں کو یوں بے مزا نہیں کرتے

نشاط قرب غم ہجر کے عوض مت مانگ
دعا کے نام پہ یوں بد دعا نہیں کرتے

منافقت پہ جنہیں اختیار حاصل ہے
وہ عرض کرتے ہیں تجھ سے گلہ نہیں کرتے

ہمارے قتل پہ محسنؔ یہ پیش و پس کیسی
ہم ایسے لوگ طلب خوں بہا نہیں کرتے

محسن بھوپالی
Relevent Best Poetry
Ajab Duniya hai na Shair Yah...

Kash Woh Pehli Muhabbat kay ...

Dard kay Phool Bhi Khilte Ha...

Ab Ke Milne Ki Yeh Shart Ho ...

Ye Duniya Dawat e Dedaar Hai...

Gham Naseebon Ko Kisi Ne to ...



Powered By: eVision Development Solutions Visit: www.evdsp.com