لکھیں اور 40404 پر سینڈ کریں۔ پھر اپنا نام لکھ کر 40404 پر سینڈ کریںFollow         Pak488 میں جا کر Write         Message     اردو ادب کے تمام شعرائے کرام کی شاعری کے ایس ایم ایس اپنے موبائل پر مفت حاصل کرنے کے لئے






Maan Ka Khawab





ماں کا خواب
 
ماخو ذ
بچوں کے لئے
 
ميں سوئی جو اک شب تو ديکھا يہ خواب

بڑھا اور جس سے مرا اضطراب

يہ ديکھا کہ ميں جا رہی ہوں کہيں

اندھيرا ہے اور راہ ملتی نہيں

لرزتا تھا ڈر سے مرا بال بال

قدم کا تھا دہشت سے اٹھنا محال
جو کچھ حوصلہ پا کے آگے بڑھی

تو ديکھا قطار ايک لڑکوں کی تھی

زمرد  سی  پوشاک پہنے ہوئے

ديئے سب کے ہاتھوں ميں جلتے ہوئے

وہ چپ چاپ تھے آگے پيچھے رواں

خدا جانے جانا تھا ان کو کہاں

اسی سوچ ميں تھی کہ ميرا پسر

مجھے اس جماعت ميں آيا نظر

وہ پيچھے تھا اور تيز چلتا نہ تھا

ديا اس کے ہاتھوں ميں جلتا نہ تھا

کہا ميں نے پہچان کر ، ميری جاں

مجھے چھوڑ کر آ گئے تم کہاں

جدائی ميں رہتی ہوں ميں بے قرار

پروتی ہوں ہر روز اشکوں کے ہار

نہ پروا ہماری ذرا تم نے کی

گئے چھوڑ ، اچھی وفا تم نے کی

جو بچے نے ديکھا مرا پيچ و تاب

ديا اس نے منہ پھير کر يوں جواب
یرلاتي ہے تجھ کو جدائی مری

نہيں اس ميں کچھ بھی بھلائی مری

يہ کہہ کر وہ کچھ دير تک چپ رہا

ديا پھر دکھا کر يہ کہنے لگا

سمجھتی ہے تو ہو گيا کيا اسے؟

ترے آنسوئوں نے بجھايا اسے
علامہ اقبالؒ
..............
Relevent Best Poetry
Hath Be-Zor Hain, Ilhaad Se ...

Tujh Ko Chora Ke Rasool E Ar...

Qalb Mein Souz Nahin, Rooh M...

Na Main Ajmi na Hindi, Na Ir...

Sama Sakta Nahin Pinhaye Fit...

Bani Aghyar Ki Ab Chahne Wal...



Powered By: eVision Development Solutions Visit: www.evdsp.com